New Posts :
Recent Posts

Kasak

Beety hoe Lamhon Ki Kasak Sath To Hogi
Khwabon Mein Hi Ho
Mulaqat To Ho Gi
بیتے ہوئے لمحوں کی کسک ساتھ تو ہوگی
خوابوں میں ہی ہو
مُلاقات تو ہوگی

Majboori

Teri khamoshi agar Teri Majboori hai
To Rahne De
Ishq kon Sa Zaroori Hai
تیری خاموشی اگر تیری مجبوری ہے
تو رہنے دے
عشق کونسا ضروری ہے

Tehzeeb

Sabar-o-tehzeeb hai Mohabbat me
Wo samajhty hain be-zabaan humain
صبروتہذیب ہے مُحبّت میں
وہ سمجھتے ہیں بے ذبان ہمیں

Qadar

Jis Qadar Jiski Qadar Ki
Us Qadar Be-Qadar Hoe Hum
جِس قدر جِس کی قدر کی
اُس قدر بے قدر ہوئے ہم

Ae Zindagi...

Ae Zindagi Itni Bad-Salookiyan
Hum Kon Sa Baar Baar Aain Gay

Ek Tum

Bharosa
Khwab
Dua
Maan
Muhabbat...
Kitne Lafzon Me Simty Ho
Sirf Ek Tum
بھروسہ
خواب
دُعا
وفا
مان
مُحبّت۔۔۔
کِتنے لفظوں میں سِمٹے ہو
صِرف ایک تُم

Fesla

Ubalty Pani Me Chehra Nazar Nahi Aata
Tumhara Ghussa Jab Utry
To Fesla Krna

اُبلتے پانی میں چہرہ نظر نہیں آتا

تُمہارا غُصّہ جب اُترے
تو فیصلہ کرنا

Ghazab

Ghazab Ki Seekhi Hain Us Ne Muhabbatain Mujh Se
Jis Kisi Se Kry Ga
Kamal kar De Ga
غضب کی سیکھی ہیں اُس نے مُحبتیں مُجھ سے
جِس کسی سے کرے گا
کمال کر دے گا

Siskiyan

Siskiyan Kis Zaban Me Likhon
Aaj ... Ilfaz........ Aabdeeda Hain

Barbad

Q Hoa Kitna Hoa Ye Na Pocho
Bus Barbad Be-waja Hoa Ye Jan Lo sab

Wajood

Tera Wajood Riwaajon K Aitkaf Me Tha
Mera Wajood Tere
Ain
Sheen
Qaaf Me Tha
تیرا وجود رِواجوں کے اعتکاف میں تھا
میرا وجود تیرے
عین
شین
قاف میں تھا


Qissa

Mukhtasar Sa Qissa Hai
Tujhe Sochna
Aur Phir Ro Dena
مُختصر سا قِصہ ہے
تُجھے سوچنا
اور پھر رو دینا

Fasaany

Aao K Aaj Khatam Hoi Dastan-e-Ishq
Ab Khatam-e-Aashiqi k Fasaany Sunaain Hum

Dunia

Dunia Kitni Chooti Hai Na
Tum Per Aa Kar Ruk Si Gai
دُنیا کتنی چھوٹی ہے نا
تُم پر آکر رُک سی گئی

Gharoor

Lo Ksi Or K Hoe Hum Bhi
Aaj Uska Gharoor Tooty Ga
لو کسی اور کے ہوئے ہم بھی
آج اُسکا غرور ٹوٹے گا

Parh Liya Zamane Ko

Bohat Parh Liya Zamane Ko
Ab Khud ko Parh Kar Dekhte Hain

Tajruba

Mukammal Bhai Adhora Bhi
Ajab Sa Tajruba Hon Main
مُکمّل بھی ادھورا بھی
عجب سا تجربہ ہوں میں

Ijazat

Dil Dukhaya Karo Ijazat Hai
Bhool Jaany Ki Baat Mat Krna

Wasiyat

Dafan Hona Hai Teri Ankhon Me
Ye Meri Akhri Wasiyat Hai

Bojhal

Chaand Nikla Na Tum Ne Di Dastak
Aaj Ki Sham Kitni Bojhal Hai

Akhri Zamana

Main Ne Sadiyon Guzarna Hai Tujhe
Tu Mera Akhri Zamana Hai

Eid Mubarak

Usy Milna To Usy Eid Mubarak Kehna
Ye Bhi Kehna K Meri Eid Mubarak Kar De

Thaam Lo Hath

Tum Jo Thaam Lo Hath Mera
Dunia Badal Sakta Hon Main

تُم جو تھام لو ہاتھ میرا
دُنیا بدل سکتا ہوں میں

Lamha

Socho To Kya Lamha Hoga
Barish
Chatri
Tum Aur Main

سوچوتو کیا لمحہ ہو گا
بارِش
چھتری
تُم اور میں

Teri Khwahish

Teri Khwahish Bus Teri Umeed Krta Hai Koi
Dekh Kr Tujh Ko
Meri Jan Eid Krta Hai Koi
تیری خواہش بس تیری اُمید کرتا ہے کوئی
دیکھ کر تُجھ کو
میری جاں عید کرتا ہو کوئی

Eid Ka Chand

Talkhiyan Barh Gai Jab Zeest K Paymaany Me
Ghool K Dard K Maaron Ne Piya Eid Ka Chand
تلخیاں بڑھ گئیں جب زیست کے پیمانے میں
گھول کے درد کے ماروں نے پِیا عید کا چاند

Hamari Eid Ho Jaye

Tumhare Chand se Chehre Ki Agar Deed Ho Jaye
Qasam Hai Apni Ankhon Ki
Hamari Eid Ho Jaye
تُمہارے چاند سے چہرے کی اگر دید ہو جائے
قسم ہے اپنی آنکھوں کی
ہماری عید ہو جائے

Mehndi

Tere Kehne Per Lagai Hai Ye Mehndi Main Ne
Eid Per Ab Na Tu Aya To Qayamat Hogi
تیرے کہنے پر لگائی ہے یہ مہندی میں نے
عید پر اب تُو نہ آیا تو قیامت ہوگی

Eid Aai Hai

Hum Na Maanain Gay K Eid Aai Hai
Aap Aaty To Eid Bhi Aati
ہم نہ مانیں گے کے عید آئی ہے
آپ آتے تو عید بھی آتی

Gham K Anso

Chand Nikla To Main Logo Se Lipat Lipat K Roya
Gham K Anso Thy Jo Khushiyon K Bahany Nikly
چاند نِکلا تو میں لوگوں سے لِپٹ لِپٹ کے رویا
غم کے آنسو تھے جوخوشیوں کے بہانے نِکلے

Milo Gay Tum Nahi To...

Rahy Gi Be-Kali Dil Me To Bhaari Eid Hogi
Milo Gay Tum Nahi To Kya Hamari Eid Hogi
رہے گی بے کَلی دِل میں تو بھاری عید ہوگی
مِلو گے تُم نہیں تو کیا ہماری عید ہوگی

Ye Eid Bhi...

Ye Bhi Acha Hoa Ye Eid Bhi Tanha Guzry Gi
Main Galy Lag K Bohat Rota
Jo Aap Aa Jaty
یہ بھی اچھا ہوا یہ عید بھی تنہا گُزرے گی
میں گَلے لگ کے بُہت روتا
جو آپ آجاتے

Teri Yadain

Is Eid Phir Sath Hain Mere
Pardes,
Tanhai,
Aur Bus Teri Yadain...
اِس عید پِھر ساتھ ہیں میرے
پردیس،
تنہائی،
اور بس تیری یادیں۔۔۔

Ek Saal

Eid K Chaand Ko Dekhe Na Koi Mere Siwa
Is K Deedar Ko Ek Saal Guzara Main Ne
عید کے چاند کو دیکھے نہ کوئی میرے سِوا
اِس کے دیدار کو اِک سال گُزارا میں نے

Mazboot

Bohat Mazboot Hon Lekin
Main Phir B Toot Jaati Hon

بُہت مظبوط ہوں لیکن
میں پِھر بھی ٹوٹ جاتی ہوں

Kaam

Wohi Rozgaar Ki Mehnatain K Nahi Hain Fursat-e-Yak-Nafs
Yehi Din Thy Kaam K Aur Hum
Koi Kaam B Nahi Kar Rahy
Related Posts Plugin for WordPress, Blogger...
 
Support : Creating Website | Johny Template | Mas Template
Copyright © 2011. 2 Lines Urdu Poetry - All Rights Reserved
Template Created by Creating Website Published by Mas Template
Proudly powered by Blogger